...................... .................

گوگل نے ہاتھ سے لکھی تحریر کو کمپیوٹر میں کاپی پیسٹ کر کے استعمال کرنے کا فیچر متعارف کرا دیا

ویب ڈیسک: گوگل نے اپنے صارفین کے لیے ایک اور انتہائی کار آمد فیچر متعارف کرا دیا جس کے تحت صارفین ہاتھ سے لکھی ہوئی تحریر کو موبائل فون کے ذریعے کاپی کر کے کمپیوٹر میں پیسٹ کر کے استعمال کرسکتے ہیں۔

ٹیکنالوجی پر نظر رکھنے والے ماہرین کے مطابق گوگل کا فیچر استعمال کرنے کے لیے ہاتھ سے لکھی ہوئی تحریر کو گوگل لینس کے ذریعے کمپیوٹر پر منتقل کیا جا سکتا ہے۔

گوگل کا یہ فیچر استعمال کرنے کے لیے کروم کا نیا اپ ڈیٹ ورژن کمپیوٹر میں انسٹال ہونا ضروری ہے جبکہ اینڈرائیڈ فون میں گوگل لینس ایپ کا ہونا بھی ضروری ہے بصورت دیگر فیچر کام نہیں کرے گا۔

اس فیچر کے تحت ہاتھ سے لکھی ہوئی تحریر کو موبائل فون لینس کے ذریعے کاپی کر کے کمپیوٹر پر پیسٹ کیا جا سکتا ہے اور پھر آپ کے سامنے تمام تحریر یونی کوڈ فانٹ میں آجائے گا۔

طریقہ استعمال
کاغذ پر لکھی ہوئی تحریر کو موبائل کیمرے کے سامنے رکھیں اور آپشن آنے پر لائن کو منتخب کر کے کاپی کر لیں، بعد ازاں اسے کمپیوٹر میں اپنی مرضی کے مطابق ڈرائیو میں سیو کریں۔

گوگل انتظامیہ نے امید ظاہر کی ہے کہ کاپی پیسٹ فیچر ویسے تو تمام ہی صارفین کے لیے اہم ہے مگر اس فیچر کا سب سے زیادہ فائدہ ڈاکٹرز، طلبا، محققین اور اساتذہ کو ہوگا۔

جواب لکھیں

%d bloggers like this: