...................... .................

سکھ یاتری اب پاسپورٹ کے بغیر بھی آ سکتے ہیں

وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ کرتارپور آنے والے یاتریوں کو پاسپورٹ کی ضرورت نہیں ہوگی، سکھ یاتریوں کو کرتارپور آمد کے لیے صرف شناختی کارڈ درکار ہوگا۔
ایچ ٹی وی پاکستان کی رپورٹ کے مطابق، وزیراعظم عمران خان نے ہندوستان سے آنے والے سکھ یاتریوں کے لیے 2 شرائط میں چھوٹ کا اعلان کردیا۔ کرتارپور آنے والے یاتریوں کو پاسپورٹ کی ضرورت نہیں ہوگی، سکھ یاتریوں کو کرتارپور آمد کے لیے صرف شناختی کارڈ درکار ہوگا۔
وزیراعظم پاکستان نے سکھ یاتریوں کے لیے 10 روز قبل رجسٹریشن کی شرط بھی ختم کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ گرو جی کی 550 ویں سالگرہ کے موقع پر کوئی فیس نہیں لی جائے گی۔
خیال رہے کہ دو روز قبل حکومت پاکستان نے سکھوں کے مذہبی پیشوا بابا گرونانگ کا 550 واں جنم دن کے موقع پر 50 روپے مالیت کا یادگاری سکہ جاری کیا تھا۔
سکے کے ایک رُخ پر اسلامی جمہوریہ پاکستان اور قومی نشان ہے جبکہ دوسرے رُخ پر سکھوں کی عبادت گاہ کی تصویر کندہ ہے۔ 50 روپے مالیت کے یادگاری سکے پر گرونانک دیو جی 1469-2019 کے الفاظ کندہ ہیں۔
واضح رہے کہ حکومت پاکستان بابا گرونانک کے 550ویں یوم پیدائش کے موقع پر نومبر میں کرتارپور راہداری کھولنے کے لیے پُرعزم ہے جس کا باضابطہ افتتاح 9 نومبر کو وزیراعظم عمران خان کریں گے۔

جواب لکھیں