...................... .................

جتنے زیادہ بچے اتنا زیادہ معاوضہ، حکومت نے اعلان کر دیا

دنیا بھر کے ممالک آبادی کنٹرول کرنے کےلیےمختلف قوانین کا نفاذ کررہے ہیں تو کچھ ممالک نے دو سے زائد بچوں کی پیدائش پر والدین کو سرکاری ملازمت کےلیے نااہل قرار دے دیا ہے لیکن ایک ملک ایسا بھی ہے دو سے زائد بچوں کی پیدائش پر نہ صرف معاوضہ دیتا ہے بلکہ زیادہ بچے پیدا کرنے والی ماں کو میڈل سے بھی نوازتا ہے۔
جی ہاں قازقستان کی حکومت نے ’مدر ہیروئن پروگرام‘ کے نام سے یہ منصوبہ شروع کیا ہے جس کا آغاز سنہ 1944 میں سابق سوویت یونین میں ہوا تھا اور پہلا انعام دس بچوں کی والدہ کو دیا گیا تھا۔
غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ حکومت کی جانب سے پروگرام حاملہ اور اکیلے بچوں کی پرورش کرنے والی خواتین کی معاونت کےلیے تشکیل دیا گیا ہے۔
قازقستان حکومت نے بچوں کی افزائش کے حسابس ے ان کی ماؤں کو میڈل سے نوازنے کا سلسلہ بھی شروع ہوا ہے، چھ بچوں کی ماں کو چاندی کا میڈل جبکہ سات یا اس سے زیادہ بچوں کی پیدائش پر سونے کا میڈل دیا جاتا ہے۔
غیر ملکی میڈیا کا کہنا تھا کہ حکومت کی جانب زیادہ بچوں کو جنم دینے والی خواتین کو بچوں کی عمر 21 برس ہونے تک معاوضہ فراہم کیا جاتا ہے لیکن جن خواتین نے 4 سے کم بچوں کو جنا ہوتا ہے انہیں معاوضہ نہیں دیا جاتا۔ تاہم جو خواتین 7 یا اس سے زیادہ بچوں کو جنم دیتی ہیں انہیں زندگی بھر معاوضہ فراہم کیا جاتا ہے
ایک چھ بچوں کی والدہ نے بتایا کہ مجھے حکومت کی جانب سے ماہانہ 370 ڈالر دئیے جاتے ہیں جو میرے لیے کافی ہیں۔

جواب لکھیں