...................... .................

ایم کیو ایم کے بانی الطاف حسین لندن میں گرفتار

نفرت انگیز تقریر کے کیس میں بانی ایم کیوایم الطاف حسین کو لندن میں گرفتار کر لیا گیا۔
بانی ایم کیو ایم پر انسداد دہشتگردی ایکٹ کے تحت فرد جرم عائد کی گئی تھی۔
نفرت انگیز تقریر کے کیس میں ضمانت ختم ہونے پر بانی ایم کیو ایم تیسری بار جمعرات کو لندن کے سدک پولیس اسٹیشن میں پیش ہوئے، جہاں انہوں نے تیسری بار بھی لندن پولیس کے سوالوں کے جوابات نہیں دیے جس پر انہیں حراست میں لے لیا گیا۔
بانی ایم کیو ایم کو پولیس حراست میں ویسٹ منسٹر مجسٹریٹ کی عدالت میں پیش کیا گیا، جہاں اُنہیں عدالت میں الزامات سے آگاہ کیاجائےگا جس کے بعد ان کے وکلا ضمانت کی درخواست دائر کریں گے۔
نفرت انگیز تقریر کے الزام میں بانیٔ ایم کیو ایم ضمانت ختم ہونے پر 4 ماہ میں تیسری بار برطانوی پولیس کے سامنے پیش ہوئے۔
ذرائع کے مطابق بانیٔ ایم کیو ایم الطاف حسین نے تیسری بار بھی لندن پولیس کے جوابات نہیں دیئے، لندن پولیس نے بانیٔ ایم کیو ایم کو سوالوں کے جوابات دینے کی ہدایت کی تھی۔
الطاف حسین سے کہا گیا کہ جوابا ت دینا ان کے مفاد میں ہوگا تاہم جوابات سے انکار پر ان پر فردِ جرم عائد کر دی گئی۔
واضح رہےکہ بانی ایم کیو ایم پر اگست 2016 ءمیں تقریر کے ذریعے لوگوں کو تشدد پر اکسانے کا الزام ہے۔
لندن پولیس نے اُنہیں رواں برس 11 جون کو نفرت انگیز تقریر کے الزام میں گرفتار کیا تھا اور وہ گزشتہ ماہ 12 ستمبر کو بھی ضمانت ختم ہونے پر سدک پولیس اسٹیشن میں پیش ہوئے تھے۔

جواب لکھیں